بچوں کی دنیا

بچوں کے اسمارٹ فون استعمال پر پابندی کا مطالبہ

بچوں کے اسمارٹ فون استعمال پر پابندی کا مطالبہ

برطانیہ میں بچوں کے اسمارٹ فون کے استعمال پر پابندی کا مطالبہ کیا گیاہے۔سابق سیکریٹری برائے ثقافت کا پارلیمنٹ میں تقریر کرتے ہوئے کہنا تھا کہ اسمارٹ فون اور ٹیبلٹ کے استعمال سے بچوں میں منفی رجحان بڑھ رہا ہے اور جنسی حملوں کے واقعات میں اضافہ ہوا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اسمارٹ فون کے استعمال پر پابندی ہونی ...

Read More »

مریض بچوں کے لئے منی گاڑیاں

امریکا کے شہرلاس اینجلس کے ایک اسپتال میں داخل بچوں کے لئے ریمورٹ کنٹرول منی گاڑیاں متعارف کی گئی ہیں۔  سان ڈیاگو اسپتال میں داخل بیمار بچوں کے دل سے خوف نکالنے کے لئے منی گاڑیاں متعارف کی گئی ہیں جسے بچے اسپتال کے احاطے میں چلا سکتے ہیں۔ بچوں کو گاڑیاں فراہم کرنے کا مقصد انہیں اسپتال کے ماحول ...

Read More »

بڑےنجی اسکولوں کی فیسوں میں 50فیصد تک اضافہ، والدین کا احتجاج

صوبائی اسکول ایجوکیشن کا کنٹرول موثر نہ ہونے کے باعث کراچی میں بڑے اسکولوں نے اپنی ماہانہ ٹیوشن فیسوں میں15 سے 50فیصد اضافہ کردیا جس سے والدین میں شدید بے چینی پھیل گئی ہے، فاونڈیشن اسکول کی جانب سے کئی گنا فیسوں میں اضافہ کئے جانے کے بعد والدین نے سڑکوں پر آنے کا فیصلہ کرلیا ہے والدین کے مطابق وہ جمعہ 18اگست کو صبح نو بجے فاونڈیشن پبلک اسکول کے دفتر کے باہر احتجاج کریں گے، کراچی کے بڑے نجی اسکولوں نے گزشتہ کئی سالوں سے من مانیاں شروع کر رکھی ہیں یہ نجی اسکولز اپنی مرضی سے فیسوں میں اضافہ کررہے ہیں ،بھاری داخلہ فیس لیتے ہیں ،سالانہ چارجز،سیکورٹی ڈپازٹ ،لائبریری فیس،لیب فیس کے ساتھ ساتھ دیگر فنڈز بھی غیر قانونی طور پر وصول کررہے ہیں جبکہ قانون کے مطابق سندھ حکومت کے قانون کے مطابق اسکول ہر سال صرف 5فیصد فیس بڑھاتے ہیں اور فیس بڑھانے کی پیشگی اجازت ڈائریکٹریٹ پرائیویٹ اسکولز سے حاصل کر نا ضروری ہے چونکہ ان اسکولز میں اعلیٰ افسران کے بچے زیر تعلیم ہیں اس لئے یہ محکمہ تعلیم کے احکامات کو خاطر میں نہیں لاتے محکمہ تعلیم کے قانون کے مطابق جسے سندھ اسمبلی نے پاس کیا ہے کل انرولمنٹ کا 10%بچوں کو فری تعلیم دینا لازمی ہے مگر اس پر بھی کو ئی عمل درآمد نہیں ہو رہا ہے دلچسپ امریہ ہے کہ اب اے لیول ادارے سیشن شروع ہونے سے6ماہ قبل داخلوں کا سلسلہ شروع کردیتے ہیں اور عارضی داخلہ دے کر کچھ رقم لے لیتے ہیں جب-Level Oکا رزلٹ آتا ہے تو یہ کچھ بچوں کے داخلے منسوخ کردیتے ہیں اور جو رقم ایڈوانس میں لی ہوتی ہے واپس دینے کے لئے والدین کو چکر لگواتے ہیں ۔یاد رہے کہ یہ اسکولز انٹرویو کے درمیان ہی غریب والدین کو داخلہ دینے سے معذرت کر لیتے ہے جو ذہین بچے ہیں لیکن ان کے والدین غریب ہیں ایسے بچے تعلیم حاصل کرنے سے قاصر ہیںوالدین نے جنگ سے بات کرتے ہوئے کہا کہ ہر سال فیسوں میں کئی گنا اضافہ کرنے کی وجہ سے ہمارے بچے تعلیم حاصل نہیں کرسکتے جبکہ ہم متعدد بار محکمہ تعلیم کو بھی اس سے آگاہ کرچکے ہیں نمائندہ جنگ نے جب ڈائریکٹر جنرل پرائیویٹ اسکو لز ڈاکٹر منسوب صدیقی کا موقف لیا تو انہوں نے کہا کہ ہم ایک سہ رکنی کمیٹی بھی تشکیل دے دی ہےجو ان اداروں کا معائنہ کر کے رپورٹ پیش کرے گی رپورٹ کی روشنی میں رجسٹریشن ایکٹ کے تحت قانونی کا روائی عمل میں لائی جائے گی۔

صوبائی اسکول ایجوکیشن کا کنٹرول موثر نہ ہونے کے باعث کراچی میں بڑے اسکولوں نے اپنی ماہانہ ٹیوشن فیسوں میں15 سے 50فیصد اضافہ کردیا جس سے والدین میں شدید بے چینی پھیل گئی ہے، فاونڈیشن اسکول کی جانب سے کئی گنا فیسوں میں اضافہ کئے جانے کے بعد والدین نے سڑکوں پر آنے کا فیصلہ کرلیا ہے والدین کے مطابق ...

Read More »

بابرکت بچہ

حلیمہ اپنے ننھے بچے کو گود میں لیے پریشان بیٹھی ہے، بچہ مسلسل روئے جارہا ہے، حلیمہ ہر طرح سے اپنے ننھے بچے کو بہلا رہی تھی مگر وہ چپ نہیں ہورہا، ایسا معلوم ہوتا ہے کہ بچے کو کوئی تکلیف ہے، قریب ہی حلیمہ کا شوہر حارث بھی پریشان نظر آرہا ہے، حلیمہ ایک نیک اور رحمدل عورت تھی ...

Read More »

اب میں خوش ہوں۔۔۔!

بہت پرانے زمانے کی بات ہے جب فلسطینی باشندے اپنی سرزمین میں امن و سکون سے رہا کرتے تھے۔ شہر خلیل میں ایک غریب خیاط (درزی) عمر رہا کرتا تھا۔ عمر بہت تنگ دستی  کے دن گزار رہا تھا۔ پھر بھی وہ اپنی قسمت سے شاکی نہیں تھا۔ اس کی جھونپڑی بہت پرانی اور خستہ ہوچکی تھی۔ مسلسل تنگ دستی ...

Read More »

ریچھ کا شکار

کاغان کی خوب صورت وادی مغربی پاکستان کے شمال میں واقع ہے۔ اس کا موسم کشمیر کی طرح نہایت خوشگوار ہوتا ہے۔ یہ علاقے چاروں طرف سے بلند پہاڑوں سے گھرا ہوا ہے، جن میں صاف شفاف پانی کی ندیاں بہتی ہیں۔ اس وادی میں بالاکوٹ کے مقام پر ایک خوبصورت کوٹھی میں احسن کی والد جو محکمہ جنگلات کے ...

Read More »

نازک صاحب کا بکرا

رؤف پاریکھ نازک صاحب ہمارے محلے میں رہتے تھے۔ نام تو ان کا اللہ جانے کیا تھا لیکن اپنی حرکتوں اور حلیے کی وجہ سے سارے محلے میں نازک صاحب کے نام سے مشہور تھے۔ دبلے پتلے دھان پان آدمی تھے۔ پھونک مارو تو اڑ جائیں۔ ذرا سی بات پر بگڑ جاتے تھے۔ جب وہ کوٹ پتلون پہنے، باریک سنہری ...

Read More »

مخلص دوست

ایک پتھر درخت کی سب سے بالائی شاخ پر بیٹے ہوئے طوطے کو لگا اور وہ پھڑپھڑاتا ہوا شاخ سے گر کر نیچے زمین پر آن گرا…. اسے تڑپتا دیکھ کر ندیم کی آنکھوں میں چمک سی آگئی، ہونٹوں پر مسکراہٹ تیرنے لگی۔ نشید سے یہ منظر دیکھا نہیں گیا، وہ دور کھڑا ندیم کی حرکات کو کافی دیر سے ...

Read More »

نااہل بادشاہ

دریا کے اس پار جنگل کے تمام جانوروں نے جنگل کے بادشاہ شیر کے خلاف بغاوت کا اعلان کردیا۔ ان کا کہنا تھا کہ صدیوں پر محیط فرسودہ اور آمرانہ نظام کا خاتمہ ہونا چاہیے اور ہر بار شیر ہی جنگل کا بادشاہ کیوں بنے، دوسرے جانوروں کو بھی حکومت کرنے کا موقع ملنا چاہیے، شہروں میں جمہوری طرز حکومت ...

Read More »

بھول بھلکڑ

کسی جنگل میں ایک ننھا منا ہاتھی رہا کرتا تھا۔ نام تھا جگنو۔ میاں جگنو ویسے تو بڑے اچھے تھے۔ ننھی سی سونڈ، ننھی سی دم اور بوٹا سا قد، بڑے ہنس مکھ اور یاروں کے یار، مگر خرابی یہ تھی کہ ذرا دماغ کے کمزور تھے۔ بس کوئی بات ہی نہیں رہتی تھی۔ امی جان کسی بات کو منع ...

Read More »